Breaking News

Daily Archives: May 19, 2017

Introduction Of Shamsa Najam

nazam-600x330-600x330

تعارف حاضر خدمت ہے انٹر نیشنل ڈائریکٹری آف رائیٹرز (ادیب نامہ) میں شامل میرا تعارف: نام: شمسہ نجم سکونت: لاس اینجلس، امریکہ شاعرہ، افسانہ نگار،مصورہ، مضمون نگار، مائکروفکشنسٹ جائے پیدائش: جھنگ صدر، جھنگ تاریخ پیدائش: 22 جنوری میٹرک: گورنمنٹ گرلز ہائی اسکول جھنگ صدر ، جھنگ گریجویٹ: گورنمنٹ کالج جھنگ (affiliate by)پنجاب یونورسٹی لاہور ماسٹرز ان اردو لٹریچر: کراچی یونیورسٹی، …

Read More »

Article By Shamsa Najam

nazam-600x330-600x330

مابعدِ جدیدیت تحریر : شمسہ نجم، لاس اینجلس، امریکہ مابعدِجدیدیت تنقید کی ایسی کسوٹی ہے جو مغرب میں ادبی تنقید کے علاوہ آرٹ ، آرکیٹیکچر اور فنونِ لطیفہ میں انقلاب رونما کر چکی ہے۔ حتیٰ کہ نصابِ تعلیم میں معیار کے پیمانے کے طور پر رائج ہو چکی ہے لیکن اردو ادب کے مفکر اور نقاد ابھی تک اس کی …

Read More »

Afsana By Shamsa Najam

nazam-600x330-600x330

عنوان : جاچ (طریقہ یا ترکیب) تحریر: شمسہ نجم، لاس اینجلس ، امریکہ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ میں کتھے جاواں باجی (میں کہاں جاؤں باجی) ہائے ہائے باجی میری دھی دے نال ظلم ہو گیا اے …

Read More »

Ghazal By Shamsa Najam

nazam-600x330-600x330

غزل شاعرہ: شمسؔہ نجم شہ رگ سے بھی تو قریب ہے ترا کرم ہے، کمال ہے یہ جو خاک میں بھی ہے روشنی ترا عکس روئے جمال ہے اسے چاہتوں کا کہوں اثر کہ تو ساتھ مرے ہے ہر ڈگر میں جہاں جہاں بھی کروں نظر ، ترا حسن ہے ، بے مثال ہے میں تو خاک ہوں وہ تہہِ …

Read More »

Nazam by Shamsa Najam

nazam-600x330-600x330

اس میں کچھ داغ ہیں اور بہت عیب ہیں تم ذرا دور سے چاند دیکھا کرو کرکے عیبوں سے صرفِ نظر دل کے تم نور سے چاند دیکھا کرو عشق میں چاند کیا خوبصورت لگے مثل محبوب بس ایک مورت لگے ایسے دستور سے چاند دیکھا کرو جب تخیل کے ترشے ہوئے اک اپالو گیارہ میں تم بیٹھ کر چاند …

Read More »

Short Story By Qaisar Nazir Khawar

nazirstory

شہر ( یہ کہانی ” Die Stadt “ پہلی بار ’ Licht und Schatten ‘ نامی جرمن جرنل میں 1910 ء میں شائع ہوئی تھی جس کا انگریزی ترجمہ امریکہ کی منیسوٹا یونیورسٹی میں جرمن زبان کے پروفیسر جیک زیپیز ’ Jack Zipes‘ نے کیا اور یہ اس کی کتاب ’ Fairy Tales of Hermann Hesse ‘ میں شامل ہے …

Read More »

Poem By Qaisar Nazir Khawar

nazeer-khawar-600x330

کیا فرق پڑتا ہے ۔۔۔۔ ( ق ، ن ، خ ) کون مرا ؟ پتہ نہیں کوئی اپنا تھا ؟ شاید سب آئے پردیس سے پردیر سے منہ دیکھا ، نہ ‘ آخری رسموں ‘ میں شریک ہوئے گناہ وثواب کس نے دیکھے بس تسبیح کے دانے گراتے رہے دفنایا ، جلایا کہ گِدھوں کی نذر کیا کیا فرق …

Read More »