Breaking News

Contents

Poem By Mehar Afroz

سلام و رحمت احباب ایک نظم زرین بصارتوں کی نذر – یقیں کا مدفن – اسے ڈھونڈتی ہوں اکثر جو کہیں پہ کھوگیا ہے ابھی رکھا تھا دل کے اندر کبھی یاد میں رکا تھا کہیں شعور کی تہوں میں میری ذات کا نشاں تھا – تھی مشام جاں معطر اسی خوشبوؤں کے بل پر میرے یقیں کو کس نے …

Read More »

Ghazal by Dilshad Nazmi

ایک تازہ غزل احباب کی نذر خاک بدن کی آڑ میں پتھر ہے موجود ایک منافق سب کے اندر ہے موجود – دیکھ لیا آ ئینہ ؟ اپنا دل بھی دیکھ ایک سا چہرہ اندر باہر ہے موجود؟ ہمت ہے تو بڑھ کے گواہی دے کوئی لاش ہے .. سامنے قاتل .. خنجر ..ہے موجود. کس نے آپ کو ایسا …

Read More »