Breaking News

Poem By Suleman Khumar

منقبت
( در مدحِ حُسین ،رضی اللہ)

یوں تھی دلِ رسول میں چاہت حسین کی
رگ رگ میں بس گئی تھی محبت حسین کی

اُس حسنِ بے مثال کی تعریف کیا کروں
اُتری تھی آسماں سے صباحت حسین کی

باطل سے جنگ کرنا ہی ایماں کی ہے دلیل
دیتی ہے درس ہم کو یہ سیرت حسین کی

لشکر عدو کا دیکھ کے حیران رہ گیا
میدانِ کربلا میں شجاعت حسین کی

ہر دور میں یزید کی پہچان ہے یہی
مدحت زباں پہ ،دل میں عداوت حُسین کی

اُس کا ٹھکانہ صرف جہنم کی آگ ہے
جس قلب میں نہیں ہے عقیدت حسین کی

محشر میں ہی کُھلے گا یہ عُقدہ ہر ایک پر
کس درجہ معتبر ہے فضیلت حسین کی

باطل ہر ایک دور میں فتنے جگاےء گا
ہر دور کو رہے گی ضرورت حسین کی

صدیاں گزر گئی ہیں مگر آج بھی خمار
زندہ ہے سب کے دل میں شہادت حسین کی

( سلیمان خمار)

About meharafroz

Check Also

Short Story By Shamoil Ahmed

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *