Breaking News

Short Story By Muhammad Jameel Akhtar

مختصرکہانی: دھوکے باز
مصنف : محمدجمیل اختر

صبح سویرے صفائی والے نے کوڑادان کوالٹنا چاہا تو اُس کی آنکھ کھل گئی۔
’’ کون ہے بھائی سونے دو‘‘
’’یہ سونے کی جگہ ہے ؟‘‘
’’وہ رات باہر سردی تھی ، میں کوڑادان کے اندرسوگیا تھا‘‘
’’ اچھا اب باہر نکلومجھے کوڑادان خالی کرناہے‘‘
’’ابھی تو سورج بھی نہیں نکلا‘‘
’’سورج کا تمہارے اٹھنے سے کیا تعلق ہے؟‘‘
’’وہ مجھے کسی سُنارکی دکان پرجانا ہے ، رات کوڑادان سے مجھے سونے کی انگوٹھی ملی تھی وہ بیچنی تھی اتنی جلدی تو کوئی دکان نہ کھلی ہوگی اب میں یہ کہاں بیچوں ؟‘‘
’’ سونے کی انگوٹھی ؟‘‘صفائی والے نے حیرت سے کہا
’’ہاں یہ دیکھو ‘‘ اور اُس نے جیب سے ایک انگوٹھی نکال کر ہتھیلی پر رکھ دی
’’یہ تم کتنے کی بیچوگے؟‘‘ صفائی والے نے کہا
’’مجھے سونے کا بھاؤ نہیں معلوم ، تم ہی بتاؤ یہ کتنے کی ہوگی؟‘‘
صفائی والے نے سوچا کہ یہ دھوکا دینے کا بہترین موقع ہے سو اُس نے کہا
’’یہ پانچ ہزارروپے کی ہوگی‘‘
’’ پانچ ہزار تو کچھ کم نہیں بتارہے ؟‘‘
’’ بھئی میں تو تمہارے بھلے کی بات کررہا ہوں بے شک دکان کھلے تو کسی سُنار سے پوچھ لینا، اگر بیچنی ہے تو ٹھہرو میں گھر سے پانچ ہزار روپے لے آتاہوں‘‘
’’ اچھا بھائی تم کہتے ہو تو سچ کہتے ہوگے لے آؤ پانچ ہزار روپے‘‘
صفائی والا بھاگتاہوا گیا اورپانچ ہزارروپے اُس آدمی کو دے کر انگوٹھی لے لی،اور اُس بے وقوف آدمی کی قسمت پر دل ہی دل میں خوب ہنسا۔
اب صفائی والا کافی بوڑھا ہوچکا ہے لیکن اُس کی ایک عادت ہے کہ وہ ہر روز کوڑادان کو زور سے ہلاتا ہے اور کہتا ہے

’’ کمبخت دھوکے باز, باہر نکلو‘‘

ختم شُد

About iliyas

Online Drugstore, buy baclofen online, Free shipping, buy Lexapro online, Discount 10% in Cheap Pharmacy Online Without a Prescription

Check Also

Hikayat Qaisar Nazir Khawar

-صوفی سنتوں کی حکایتوں سے انتخاب بزرگی اور دانائی اردو قالب؛ قیصر نذیر خاور یہ …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Online Drugstore, buy lamisil online, Free shipping, buy keppra online, Discount 10% in Cheap Pharmacy Online Without a Prescription