Breaking News

Ghazal By Arshad Abdul Hameed

غزل
۔۔۔۔
ارشد عبدالحمید

buy Tadalis SX Soft online, acquire dapoxetine.

روز اک شاہ رہ _ رنج _ سفر کھولتے ہیں
ہم کہ ہر روز تری یاد کا در کھولتے ہیں

اب تو اے دفتر _ جاں مجھ کو بھی فارغ کر دے
شام آتی ہے تو مزدور کمر کھولتے ہیں

خوف کے کون سے گنبد سے ہوئے ہیں آزاد
یہ پرندے کہ نہ منقار نہ پر کھولتے ہیں

ہم نکل جاتے ہیں اک اور مسافت کی طرف
لوگ جس وقت کہ سامان _ سفر کھولتے ہیں

ایسے مالک تو کسی کے بھی نہ ہوں گے ارشد
ہم دعا کرتے ہیں وہ باب _ اثر کھولتے ہیں
© © © ©

About Mehar Afroz

Check Also

Naat By Dr Maqsood Hassani

مسکان کے بطن سے وہ صاحب جلال دفعتا جمال میں آیا پھر تھوڑا سا مسکرایا …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *