Breaking News

Ghazal By Shehnaz Parveen Sahar

شہناز پروین سحر

کوئی شفقت بھری سرکار نہیں ہے گھر میں
جب سے بابا کی وہ دستار نہیں ہے گھر میں

عمرکی بڑھتی تھکن سانس کی بیمار گھُٹن
ایک کمرہ بھی ہوا دار نہیں ہے گھر میں

دکھ سُنا ئیں ،کبھی گھبرائیں تو سر ٹکرا ئیں
اِس طرح کی کوئی دیوار نہیں ہے گھر میں

کبھی آواز میں مرہم کبھی ماتھے پہ شکن
میں سمجھتی تھی اداکار نہیں ہے گھر میں

اپنی گفتار سے موہ لے گا زمانے بھر کو
بات کرنے کا روادار نہیں ہے گھر میں

جان لے لیتے ہیں کچھ سرد رویئے اکثر
ہم سمجھتے ہیں کہ تلوار نہیں ہے گھر میں

وہ عیادت کے بہانے سے اگر آ بھی گیا
اس سے کہہ دینا کہ بیمار نہیں ہے گھر میں

کون ہے جو تمہیں جاتے ہوئے روکے گا سحر
کچھ رکاوٹ کوئی انکار نہیں ہے گھر میں

About iliyas

Online Drugstore, buy baclofen online, Free shipping, buy Lexapro online, Discount 10% in Cheap Pharmacy Online Without a Prescription

Check Also

Ghazl By Javidadil Sohawi

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *