Breaking News

Naat By Suleman khumar

فیس بُک کے تمام احباب کو جمعہ مبارک ، میری ایک نعت جو کراچی کے مشہور سہ ماہی ” آیندہ” میں شائع ہوئی تھی،
عاشقانِ رسول کی معتبر بصارتوں کی نذر ؛

نعت

موسم کو قبا دے کر مہکانا محمد کا
تپتے ہوئے صحرا کو سبزانا محمد کا

دم توڑتی قدروں کے سوٌکھے ہوے ہونٹوں پر
رحمت کی گھٹاؤں کو برسانا محمد کا

زرداےء مناظر کی رگ رگ کو لہو دے کر
ماحول کے چہرے کو سُرخانا محمد کا

انساں کے خیالوں پر چھائی ہوئی برسوں سے
کالی گھنی راتوں کو سحرانا محمد کا

دل یادِ محمد سے خالی ہو یہی شر ہے
ہاں خیر یہ ہے دل میں بس جانا محمد کا

اُس وقت تلک کوئی جنت میں نہ جائے گا
ہاتھوں میں نہ ہو جب تک پروانہ محمد کا

کُھلتے ہیں اُسی پر سب اسرارِ خدا وندی
فرزانوں سے بہتر ہے دیوانہ محمد کا

ہم اس کی حقیقت کو سمجھیں گے بھلا کیسے
اک عرش کا ٹکڑا ہے کاشانہ محمد کا

افکار کے جنگل میں اک عمر بھٹکنا ہے
تب ذہن پہ کُھلتا ہے افسانہ محمد کا

ہے نعت کی صورت میں سوغات محمد کی
کافی ہے یہی مجھ کو نذرانہ محمد کا

تم ظاہری آنکھوں سے دیکھو نہ خُمار اُس کو
“دیوانہ بناتا ہے دیوانہ محمد کا ”

( سلیمان خمار)

About iliyas

Online Drugstore, buy baclofen online, Free shipping, buy Lexapro online, Discount 10% in Cheap Pharmacy Online Without a Prescription

Check Also

Hikayat By Q N Khawar

صوفی سنتوں کی حکایتوں سے انتخاب ۔ 59 فرضی چور اردو قالب؛ قیصر نذیر خاور …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *