Breaking News

Short Story By Mehar Afroz

…بدلاؤ…….
وہ بیوی کو سائیکل چلانا سکھا رہا تھا جو کھاتے پیتے گھرانے کی ضرورت سے زیادہ صحتمند لڑکی تھی .گھنٹہ بھر تک وہ اسکے پیچھے سائیکل پکڑے بھاگتا رہا مگر کسی طرح وہ بیلنس کرنا سیکھ نہیں سکی …
چڑ کر اس نے کہا
“اپنے باپ کے گھر سے سیکھ کر آتی میری چھاتی کا بوجھ کیوں بن گئی ؟؟؟گھر چلو بڑی آئی سائیکل سیکھنے والی …..
وہ کبھی سائیکل نہیں سیکھ پائی نہ اس نے اسکوٹر چلانے کی جراءت کی، البتہ یہ ضرور کیا کہ افسر بنتے ہی اس نے گاڑی سیکھ کر نئی برانڈیڈ گاڑی خرید لی .
کل وہ پھر سے اپنی ان پڑھ بیٹی کو سائیکل سکھا رہا تھا
بوڑھا ہوتا بدن تھک رہا تھا …..
“سیدھے بیلنس کر میں نہیں پکڑنے کا اب .گر کر مر گئی تو یہیں سے لے جاکر دفن کردونگا،پھر گھر واپس جاکر نہا لونگا “……..
بچی نے مڑ کر دیکھا
“بابا گھر چلو مجھے سائیکل نہیں سیکھنی ..اب پتہ چلا اماں آپ کے ساتھ کیوں نہیں ہے “!!!!!،،
مہر افروز
دھارواڑ
کرناٹک
انڈیا

About Mehar Afroz

Check Also

Naat By Dr Maqsood Hassani

مسکان کے بطن سے وہ صاحب جلال دفعتا جمال میں آیا پھر تھوڑا سا مسکرایا …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *